گلگت بلتستان قانون ساز اسمبلی: سرکاری ہسپتالوں میں فیس وصولی کے لیے مسودہ قانون پیش

گلگت بلتستان قانون ساز اسمبلی: سرکاری ہسپتالوں میں فیس وصولی کے لیے مسودہ قانون پیش

6 views
0
Share on FacebookTweet about this on TwitterShare on LinkedInPin on PinterestShare on Google+

گلگت (عبدالرحمن بخاری سے) صوبائی حکومت گلگت بلتستان نے سرکاری ہسپتالوں سے مفت علاج کی سہولت ختم کرکے علاج و معالجے پر فیسیں نافذ کرتے ھوے اس کو قانونی تحفظ دینے کے لیے مسودہ قانون منظوری کے لیے ایوان میں پیش کردیا۔

healthصوبائی وزیر صحت حاجی گلبر نے بل اسبلی میں پیش کیا جیسے ڈپٹی سپیکر نے سلیکٹ کمیٹی کے سپرد کردیا۔ اس مسودے پر اسمبلی کے آیندہ اجلاس میں بحث کی جاے گی۔

مذکورہ بل پر قانون سازی کی صورت میں گلگت بلتستان کے عوام کو 66 سالوں سے حاصل مفت علاج کی سہولت ختم ہوجاے گی اور مریضوں سے مختلف مدوں میں فیس کے نام پر ٹیکس وصول کیا جاے گا سرکاری ہسپتالوں میں عوام کو پھلے ہی ناکافی سہولیات کا سامنا ہے فیسوں کی وصولی سے غریب عوام پر مزید مالی پوجھ بڑھ جاے گا۔

Share on FacebookTweet about this on TwitterShare on LinkedInPin on PinterestShare on Google+

آپ کی رائے

comments

About author

پامیر ٹائمز

پامیر ٹائمز گلگت بلتستان، کوہستان اور چترال سمیت قرب وجوار کے پہاڑی علاقوں سے متعلق ایک معروف اور مختلف زبانوں میں شائع ہونے والی اولین ویب پورٹل ہے۔ پامیر ٹائمز نوجوانوں کی ایک غیر سیاسی، غیر منافع بخش اور آزاد کاوش ہے۔