دیامر کے مختلف علاقوں کو چلاس سے ملانے والا پل خستہ حالی کی وجہ سے خطرناک بن چکا ہے

دیامر کے مختلف علاقوں کو چلاس سے ملانے والا پل خستہ حالی کی وجہ سے خطرناک بن چکا ہے

3 views
0
Share on FacebookTweet about this on TwitterShare on LinkedInPin on PinterestShare on Google+

چلاس(بیورورپورٹ)دیامر کے مختلف نالہ جات کو چلاس شہر سے ملانے والے دریائے سندھ پر واقع پل موت کا کنواں بن گئے ۔انتہائی خستہ حالی کے سبب گاڑیوں کا گزرنا محال ہو گیا ۔بروقت اقدامات نہ ہو نے کی صورت میں کو ئی بڑا حادثہ پیش آنے کا خدشہ ہے ۔ضلع دیامر کے مختلف نالہ جات گوہر آباد ،کھنر اور ہڈر کو چلاس شہر سے ملانے والے دریائے سندھ پر واقع پل انتہائی خستہ حالت میں ہیں ۔پل کے رسے کمزور پڑ چکے ہیں جبکہ حفاظتی جنگلے بھی ٹوٹ پھوٹ کا شکا ر ہیں ۔مسافر پل سے گزرتے ہو تے کلمہ طبیہ کا ورد کر تے ہیں اور جان ہتھیلی پر رکھ کر پل عبور کر تے ہیں ۔مذکو رہ خستہ حال پلوں کی مرمت کیلئے تاحال کسی قسم کے اقدامات نہیں کیئے گئے ہیں جس کی وجہ سے خدانخواستہ کو ئی افسوسناک حادثہ رونما ہو سکتا ہے ۔ضلع دیامر کے ان نالہ جات کے عوام نے کئی بار متعلقہ ادارے کے ذمہ داران کو اس بارے آگاہ کیا ہے لیکن کو ئی شنوائی نہیں ہو ئی ۔عوامی حلقوں نے کہا ہے کہ کسی حادثے کی صورت میں متعلقہ ادارے کے ذمہ داران کے خلاف مقدمہ درج کیا جائے گا ۔حکام بالا کو پلوں کی خستہ حالی کا فوری نوٹس لینا چاہیئے اور کسی افسوسناک واقعہ سے قبل اقدامات کر نے چاہیں ۔

Share on FacebookTweet about this on TwitterShare on LinkedInPin on PinterestShare on Google+

آپ کی رائے

comments

About author

پامیر ٹائمز

پامیر ٹائمز گلگت بلتستان، کوہستان اور چترال سمیت قرب وجوار کے پہاڑی علاقوں سے متعلق ایک معروف اور مختلف زبانوں میں شائع ہونے والی اولین ویب پورٹل ہے۔ پامیر ٹائمز نوجوانوں کی ایک غیر سیاسی، غیر منافع بخش اور آزاد کاوش ہے۔