صوبائی نشست کاانتخابات لڑنے کا میرا فیصلہ ضلع مستوج کی بحالی سے مشروط ہے ۔امیر اللہ یفتالیؔ !

صوبائی نشست کاانتخابات لڑنے کا میرا فیصلہ ضلع مستوج کی بحالی سے مشروط ہے ۔امیر اللہ یفتالیؔ !

8 views
0
Share on FacebookTweet about this on TwitterShare on LinkedInPin on PinterestShare on Google+

بونی(ذاکر محمد زخمی)سب ڈویژن مستوج کے سیاسی و سماجی شخصیت و متحدہ یوفت یونین کے آرگنائزر امیر اللہ خان یفتالیؔ نے اپنے ایک اخباری بیان کے ذریعے اپنے انتخابی پروگرام کا اعلان کرتے ہوئے کہا ہے کہ2018ء کے جنرل الیکشن میں سب دویژن مستوج سے صوبائی نشست کا انتخابات لڑنے کا میرا فیصلہ صرف اور صرف ضلع مستوج کی بحالی سے مشروط ہے۔مجھے اگر مستوج کے عوام نے منتخب کیا تو میں چھ۶ مہینوں تک صوبائی اسمبلی کے اندر ضلع مستوج کے بحالی کے لیے عملی اور بھر پور جدو جہد کرونگا اگر چھ مہینے کے اندر مجھے کامیابی حاصل نہیں ہوئی تو میں قوم سے وعدہ کرکے اعلان کرتا ہوں کہ میں صوبائی اسمبلی کے سامنے تا دمِ مرگ بھوک ہڑتال کرونگا۔ اور صوبائی اسمبلی کے احاطے سے میرا جنازہ اُٹھایا جائے گا۔

اُنہوں نے کہا کہ میر ا یہ اعلان ایک غیرت مند علاقے لاسپور سے تعلق کا اور ایک سیاسی خاندان کا حتمی فیصلہ ہے ۔کیونکہ ضلع ہزارہ ایک ضلع تھا وہاں کے قیادت کی جد و جہد سے ہزارہ چار ضلعے بن گئے ۔ہمارے مفاد پرست نمائیندے نے کبھی بھی مستوج ضلع کی بحالی کے لیے سنجیدہ آواز اُٹھانے کی جسارت نہیں کی بلکہ کوئی آواز ہی نہیں اُٹھائی ،،،حالانکہ مستوج کے ضلع 1969 میں ہم سے چھین لی گئی ہے جو مستوج کے ساتھ ایک سازش تھی ۔ اس سے پہلے ضلع مستوج میں مختلف ڈپٹی کمشنر تعینات ہو کر اپنے فرائضِ منصبی انجام دے چکے ہیں ان میں ڈپٹی کمشنر میں شہزادہ اسد الرخمٰن، ڈپٹی کمشنر شہزادہ محمد شہاب الدین، ڈپٹی کمشنر ظفرا حمد خان اور ڈپٹی کمشنر شہزادہ محی الدین مستو ج ضلع کے ڈپٹی کمشنر رہ چکے ہیں۔

اُنہوں نے کہا کہ میں یہاں اس بات کو بھی واضح کرنا چاہتا ہوں کہ میرے پاس الیکشن لڑنے یا پولنگ ایجنٹ کو دینے کے بھی پیسے نہیں ہیں۔ میں صرف اور صرف ضلع بحالی کے مشن کے ساتھ میدانِ کارِ زار میں قدم رکھ رہا ہوں۔ یہ آپ سب خوب جانتے ہیں کہ اس وقت بلند و بانگ دعووں سے ہٹ کر عملی طور کچھ خاص کرنے کی ضرورت ہے۔ اگر اس علاقے کو ترقی یافتہ علاقوں کے صف میں دیکھنا چاہتے ہیں تو صرف ایک حل ہے مستوج ضلع کی بحالی۔ یہ ہی عوام سے میری گزارش ہے کہ وقت کی قدر دانی کرے اور موقع پرستوں سے دور رہے ۔

Share on FacebookTweet about this on TwitterShare on LinkedInPin on PinterestShare on Google+

آپ کی رائے

comments

About author

پامیر ٹائمز

پامیر ٹائمز گلگت بلتستان، کوہستان اور چترال سمیت قرب وجوار کے پہاڑی علاقوں سے متعلق ایک معروف اور مختلف زبانوں میں شائع ہونے والی اولین ویب پورٹل ہے۔ پامیر ٹائمز نوجوانوں کی ایک غیر سیاسی، غیر منافع بخش اور آزاد کاوش ہے۔