ضلع غذر کے بالائی گاوں بدصوات، بورتھ اور مترم دان صحت، پانی اور مواصلات کی سہولت سے ہنوز محروم

ضلع غذر کے بالائی گاوں بدصوات، بورتھ اور مترم دان صحت، پانی اور مواصلات کی سہولت سے ہنوز محروم

14 views
0
Share on FacebookTweet about this on TwitterShare on LinkedInPin on PinterestShare on Google+

غذر(بیورو رپورٹ) غذر کے بالائی علاقے بدصوات ، بورتھ اورمحترم دان اشکومن کے عوام اس دور جدید میں بھی صحت ،پانی اورٹیلی فون وموبائیل کی سہولیت سے محروم ہیں ہزاروں آبادی والے اس علاقے کو ہر حکومت نے اپنے دور اقتدار میں مکمل طور پرنظرانداز کیا ہے جس کی وجہ سے اس دور جدید میں بھی یہاں کے عوام ٹیلی فون اور موبائیل کی سہولت سے محروم ہیں اور صحت کے حوالے سے بھی یہاں کے عوام کو سخت پریشانیوں کا سامنا کرنا پڑتا ہے اور معمولی مریض کو کئی کلومیٹر کا سفر طے کر کے چٹورکھنڈ ہسپتال لایا جاتا ہے جبکہ سردیوں کے موسم میں اس علاقے کا زمینی رابطہ دیگر علاقوں سے کٹ جاتا ہے پینے کا صاف پانی کی عدم دستیابی سے بھی یہاں کے عوام کو سخت مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے اور پانی صاف نہ ملنے کی وجہ سے پیٹ کی مختلف بیماریوں کا شکار ہیں علاقے کے مکین کرم علی ،علی بائی ،محمد پناہ اورملنگ جان نے میڈیا سے باتیں کرتے ہوئے کہا کہ حکومت وقت سے یہاں کے مسائل کے حل کا مطالبہ کیا ہے ان کا کہنا ہے کہ سردیوں کے موسم میں پانی پر برف جم جانے سے یہاں کے مکینوں کا پانی کا حصول بھی مشکل ہوجاتا ہے اس علاقے کے عوام کو اس دور جدید میں نہ تو ٹیلی فون کی سہولت دستیاب ہے اور نہ ہی موبائیل کی سہولت حاصل ہے کسی بھی حکومت نے اس علاقے کے مسائل کے حل کی طرف کوئی توجہ نہیں دی اس حوالے سے یہاں کے عوام نے کئی بار حکمرانوں کے پاس اپنے مسائل لیکر گئے مگر صرف تسلیوں کے علاوہ کسی بھی مطالبے پر کوئی عملدرامد نہیں ہوا یہاں تک کہ گاؤں کے مکینوں نے ایس سی او کے زمہ دران سے گاوں کو ٹیلی فون اور موبائیل کی سہولت فراہم کرنے کا کئی بار مطالبہ کیا مگر اس پر بھی پیش رفت نہ ہوسکی۔

Share on FacebookTweet about this on TwitterShare on LinkedInPin on PinterestShare on Google+

آپ کی رائے

comments

About author

پامیر ٹائمز

پامیر ٹائمز گلگت بلتستان، کوہستان اور چترال سمیت قرب وجوار کے پہاڑی علاقوں سے متعلق ایک معروف اور مختلف زبانوں میں شائع ہونے والی اولین ویب پورٹل ہے۔ پامیر ٹائمز نوجوانوں کی ایک غیر سیاسی، غیر منافع بخش اور آزاد کاوش ہے۔