وزیر اعلی گلگت بلتستان نے وفاق پر زور دیا ہے کہ گلگت بلتستان میں توانائی کا بحران حل کئے بغیر کوئی بھی دیرپا منصوبہ کامیاب نہیں ہو سکتا ۔ صو با ئی وزیر اطلاعات

گلگت ( پ ر) صو با ئی وزیر اطلاعات، منصوبہ بندی و ترقیات اقبال حسن نے کہا ہے کہ صوبائی حکومت اپنی بھرپور کوشش کر رہی ہے کہ تمام دستیاب وسائل کو بروئے کار لا کر صوبے کے مسائل کا حل تلاش کیا جائے اور عوام دوست منصوبوں میں مزید تیزی لائی جائیگی۔ صوبائی حکومت وفاق کے تعاون سے بڑے اہم منصوبوں کا آغاز کرنے جا رہی ہے جن میں سر فہرست توانائی کے منصوبے ہیں۔۔ ملک کے اہم اداروں بشمول واپڈا، اور نیشنل ہائی وے اتھارٹی کے تعاون سے صوبے میں اہم سرگرمیاں ترقی کی رفتار کو بڑھانے کا موجب بنیں گی۔ وفاق کی جانب سے اس بات کی یقین دہانی کرائی گئی ہے کہ صوبے میں بجلی کی پیداوار کو بڑھانے کے لیے ترجیحی بنیادوں پر فنڈز کی فراہمی کو ممکن بنایا جائے گا۔ صوبائی وزیر اطلاعات و منصوبہ بندی نے مزید کہا کہ وزیر اعلی گلگت بلتستان نے وفاق پر زور دیا ہے کہ گلگت بلتستان میں توانائی کا بحران حل کئے بغیر کوئی بھی دیرپا منصوبہ کامیاب نہیں ہو سکتا ۔ ریجنل گرڈ کے قیام اور نیشنل گرڈ تک رسائی کے لیئے بھی کوششیں جاری ہیں۔ حکومت کو یقین ہے کہ مسلم لیگ ن کی صوبائی حکومت ترقی کے ویژن کے تحت گلگت بلتستان کو بھی تمام بڑے شہروں کے مقابلے میں ترقی یافتہ بنائے گی۔ دیامر بھاشا ڈیم کو سی پیک کا اہم حصہ قرار دینا اس بات کی غمازی کرتا ہے کہ وفاقی حکومت ہر صورت اس میگا منصوبے کو کامیابی سے ہمکنار کرے گی ، جس سے ملک بھر میں توانائی کے بحران کا دیرپا حل ممکن ہو پائے گا۔

Print Friendly, PDF & Email

آپ کی رائے

comments