الخدمت فاونڈیشن کی جانب سے گلگت بلتستان میں گھر گھر قربانی گوشت کی تقسیم

الخدمت فاونڈیشن کی جانب سے گلگت بلتستان میں گھر گھر قربانی گوشت کی تقسیم

49 views
0
Share on FacebookTweet about this on TwitterShare on LinkedInPin on PinterestShare on Google+
???????????????????????????????
گلگت (پریس ریلیز) الخدمت فاونڈیشن گلگت بلتستان نے گھر گھر قربانی گوشت کی تقسیم کر کے نئی روایت قائم کر دی ،الخدمت فاونڈیشن گلگت بلتستان نے اکنا ریلیف ،ہیلپنگ ہینڈز ، یو کے اسلامک مشن اور الخدمت فاونڈیشن پاکستان کے تعاون سے گلگت ، غذر، استوراور سکردو کے ہزاروں غریب ،مساکین اور بیواوں میں قربانی کا گوشت تقسیم کیا۔قربانی پروجیکٹ کے تحت چاروں اضلاع میں اجتماعی قربانی کی گئی ۔جہاں سے گوشت کو الخدمت فاونڈیشن کے رضاکاروں نے گھر گھر جا کر تقسیم کیا۔صاف شفاف اور منصفانہ تقسیم کیلئے الخدمت فاونڈیشن نے تقسیم سے قبل محلہ سطح پر سروے کرا کر ڈیٹا اکھٹا کیا تھا ، تاکہ قربانی کا گوشت مستحق افراد تک پہنچ سکے۔
اس دوران الخدمت فاونڈیشن گلگت بلتستان کے صدر عطاء اللہ شمسی اور دیگر زمہ داران نے قربان گاہ کا دورہ کیا اور پروجیکٹ کی مانیٹرنگ بھی کی ۔ اس دوران صدر الخدمت فاونڈیشن گلگت بلتستان نے کہا کہ ہماری کوشش ہے کہ قربانی کا گوشت مستحق افراد تک پہنچ سکے ، الخدمت بلاتفریق خدمت خلق پر یقین رکھتی ہے ،انہوں نے مذید کہا کہ اللہ کا شکر ہیکہ الخدمت نے گلگت بلتستان میں اپنی سرگرمیوں کا باقاعدہ آغاز کر دیا ہے، استورگشٹ فائر ڈیزاسٹر کے متاثرین کیلئے امدادروانہ کر رہیں ہیں ، آنکھوں سے معذور افراد کو وائٹ سٹکس فراہم کی جائیگی، آرفنز کئیر پروگرام کے تحت گلگت کے 200 یتیم بچوں کو سکالر شپ فراہم کر رہا ہے ، 26 اکتوبر کو یتیم بچوں کی صلاحیتیں اجاگر کرنے کیلئے روشن پاکستان فیسٹیول کا انعقاد کیا جا رہا ہے۔ الخدمت فاونڈیشن کی طرف سے گھر گھر گوشت کی تقسیم پر عوام سے بہت سراہا اور امید ظاہرکی کہ آئندہ بھی اسی طرح خدمت کا سلسلہ جاری رہیگا۔
Share on FacebookTweet about this on TwitterShare on LinkedInPin on PinterestShare on Google+

آپ کی رائے

comments

About author

پامیر ٹائمز

پامیر ٹائمز گلگت بلتستان، کوہستان اور چترال سمیت قرب وجوار کے پہاڑی علاقوں سے متعلق ایک معروف اور مختلف زبانوں میں شائع ہونے والی اولین ویب پورٹل ہے۔ پامیر ٹائمز نوجوانوں کی ایک غیر سیاسی، غیر منافع بخش اور آزاد کاوش ہے۔