چترال،راغ کے مقام پرتالاب میں نہاتے ہوئے دو کزن ڈوب کر جان بحق 

چترال(بشیر حسین آزاد ) وادی چترال میں شدید گرمی نے دو نوجوانوں کی جان لے لی۔موٹر سائیکل پر رشتے دار کے ہاں جاتے ہوئے راستے میں گرمی لگی تو تالاب پر نہانے گئے ۔ خونی تالاب نے دونوں نوجوانوں کو نگل لیا امدادی ٹیموں کے غوطہ خوروں نے لاشوں کو تالاب سے نکال لیا گیا۔جان بحق ہونے والے نوجوان آپس میں کزن ہیں علی رضاء لاہور سے عید منانے چترال میں اپنے نانیال آیا ہوا تھا۔تفصیلات کے مطابق فیض آباد ہون کی رہائشی اسد اللہ ولد عنایت اللہ اور اُس کا بھانجا علی رضاء ولد عدالت خان سکنہ لاہور پنجاب موٹر سائیکل پر چترال سے مروئی جا رہے تھے کہ چترال شہر سے تقریباً تیرہ کلومیٹر دور راغ لشٹ کے مقام پر شدید گرمی لگنے کے باعث نزدیکی تالاب میں نہانے گئے جہاں نہاتے ہوئے دو نوں نوجوان اسد اللہ اور علی رضاء ڈوب گئے۔اسد اللہ کا چھوٹا بھائی شجاع اللہ بھی جو اُن کے ہمراہ تھے کے شور مچانے پر لوگ جمع ہوئے تاہم اُنہیں کوئی کامیابی نہیں ہوئی جس کے بعد چترال شہر سے غوطہ خوروں پر مشتمل امدادی ٹیمیں پہنچ کر لاشوں کو تلاب سے برآمد کرکے لواحقین کے حوالے کردیا ۔کوغذی پولیس نے جائے حادثہ پر پہنچ کر تفتیش شروع کر دی ہے۔ بتایا جاتا ہے کہ متوفی علی رضاء لاہور سے عید کی خوشیاں منانے چترال اپنے رشتے داروں کے ہاں آیا ہوا تھا ۔واقعے کی خبر سنتے ہی چترال شہر سے لوگوں کی بڑی تعداد جائے حادثہ پہنچ گئی ہیں۔

Print Friendly, PDF & Email

آپ کی رائے

comments