آئین کے آرٹیکل ٦٢ اور ٦٣ کا اطلاق گلگت بلتستان میں نہیں ہوسکتا: امجد حسین ایڈوکیٹ

8 views
0
Share on FacebookTweet about this on TwitterShare on LinkedInPin on PinterestShare on Google+

گلگت(صفدر علی صفدر) گلگت بلتستان کونسل کے رکن و معروف قانون دان امجد حسین ایڈوکیٹ نے پاکستان مسلم لیگ ن گلگت بلتستان کے چیف آرگنائزر حافظ حفیظ الرحمن کی جانب سے آئین پاکستان کے آرٹیکل 62اور63کے گلگت بلتستان میں اطلاق کے سلسلے میں گلگت بلتستان کونسل کی جانب سے کی جانے والی قانون سازی کے حوالے سے دےئے جانے والے بیان کی تردید کرتے ہوئے اسے جھوٹ کا پلندہ قرار دیا ہے ۔ہفتہ کے رو زپامیر ٹایمز سے ٹیلی فونک گفتگو میں امجد حسین ایڈوکیٹ کا کہنا تھا کہ حافظ حفیظ الرحمن دن بھر سوتے رہتے ہیں اور شام کو میڈیا میں اوٹھ پٹانگ بیانات دیتے ہیں ۔انہیں یہ بھی معلوم نہیں کہ گلگت بلتستان میں آئین پاکستان کا اطلاق ہوسکتا ہے ۔اور نہ ہی کونسل کے پاس اس حوالے سے قانون سازی کا کوئی اختیار ہے جبکہ گلگت بلتستان میں عوامی نمائندگی ایکٹ اور نادہندگان کے الیکشن لڑنے کا گلگت بلتستان ایمپاورمنٹ اینڈ سلف گورننس آرڈر 2009میں بھی کوئی ذکر نہیں ہے ۔ایسے میں حفیظ الرحمن کا بیان جھوٹ کے سوا کچھ نہیں ۔انہوں نے ایک سوال کے جواب میں کہا کہ گلگت بلتستان کی صوبائی حکومت کی مدت کا بینہ کی حلف برداری کی تاریخ کے دن پوری ہوجاتی ہے گورننس آرڈر میں ترمیم لاکر مسلم لیگ ن کی حکومت کل بھی الیکشن کراسکتی ہے تو اس پر انہیں کوئی اعتراض نہیں ہے کیونکہ گورننس آرڈر میں ترمیم کے بغیر وقت سے قبل انتخابات کا انعقاد ایک غیر جمہوری اقدام ثابت ہوگا۔

Share on FacebookTweet about this on TwitterShare on LinkedInPin on PinterestShare on Google+

آپ کی رائے

comments

About author

پامیر ٹائمز

پامیر ٹائمز گلگت بلتستان، کوہستان اور چترال سمیت قرب وجوار کے پہاڑی علاقوں سے متعلق ایک معروف اور مختلف زبانوں میں شائع ہونے والی اولین ویب پورٹل ہے۔ پامیر ٹائمز نوجوانوں کی ایک غیر سیاسی، غیر منافع بخش اور آزاد کاوش ہے۔