سرکار سے تنخواہ لینے والوں نے سرکاری امور کے لئے اپنے ذاتی ملازم رکھ لئے، خود کاروبار چلا رہے ہیں، یا گھروں‌میں‌بیٹھے ہیں‌

غذر (بیورو رپورٹ) اصل ملازم گھر میں جبکہ ملازم کا رکھا ہوا ملازم دفتر میں کام کرنے انکشاف تنخواہ برابری کی بنیاد پر تقسیم جب محکموں کے سربراہان کو پتہ ہونے کے باوجود وہ اصل ملازم کے بجائے ملازم کے رکھے ہوئے ملازم سے سرکاری کام لے رہے ہیں غذر کے مختلف محکموں میں اصل ملازم کی بجائے دوسرے افراد کا ڈیوٹی دینے کا انکشاف محکمہ تعمیرات عامہ،اورصحت کے علاوہ دیگر محکموں میں ایسے درجنوں ملازمین کا انکشاف ہوا ہے جو اپنے گھروں میں بیٹھ کر تنخواہ وصول کرتے ہیں اور ان کی جگہ پر دوسرے لوگ ڈیوٹی دیتے ہیں جن کو اصل ملازم پانچ ہزار ماہانہ تنخواہ دیتے ہیں محکمہ تعمیرات عامہ کے بعض ڈرائیور،روڈ قلی اور پلوں کی نگرانی کرنے والے چوکیدار نے اپنی جگہ پر دوسرے افراد کو ڈیوٹی پر لگایا ہوا ہے اورسرکار کے ان ملازمین نے اپنی جگہ دوسرے افراد کو ڈیوٹی پر لگا کر خود کاروبار کرتے ہیں گاہکوچ میں ایسے ایک درجن ملازمین بھی جو سرکار کے کھاتے میں ملازمین ہیں مگرانھوں نے گاڑیاں ٹھیک کرنے کے ورکشاپ اور ٹائر ٹھیک کرنے کی دکانیں کھول رکھی ہے مگر اس کے باوجود یہ لوگ ہر ماہ کے اخر میں دفتر جاکر اپنی پوری تنخواہ وصول کرتے ہیں اس طرح محکمہ صحت کے بھی درجنوں ملازمین جن میں سب سے زیادہ گریڈ ون کے ملازمین ہیں ان کی جگہ ان کے رشتہ دار دیوٹی دیتے ہیں اور اصل ملازمین گھروں میں میں بیٹھے تنخواہ وصول کرتے ہیں مگر یہ لوگ اتنے بااثر ہیں کہ افسران کو پتہ ہونے کے باوجود بھی کوئی کارروائی نہیں کرتے

Print Friendly, PDF & Email

آپ کی رائے

comments